A+ R A-
28 مئی 2017
RSS Facebook Twitter Linkedin Digg Yahoo Delicious

Ads1

ایڈمن

ایڈمن

اعظم گڑھ: جانی مانی اداکارہ، سماجی کارکن اور سابق راجیہ سبھا رکن شبانہ اعظمی کا کہنا ہے کہ مسلمانوں سمیت ملک کے عوام نے تبدیلی کے لیے لوک سبھا انتخابات میں نریندر مودی کو ووٹ دیا لیکن اقلیتوں کا ایک حصہ اب بھی مودی سے ڈرا ہوا ہے اور وزیر اعظم کے لیے یہ خوف کو دور کرنا اور اپنے دل اور ہندووادی تنظیموں کے عناصر سے نمٹنا خاصاً بڑا چیلنج ہوگا۔

 

 

اپنے آبائی گاؤں میجوان آئی ہوئی شبانہ اعظمی نے میڈیا سے خصوصی بات چیت میں کہا کہ ملک کے لوگ تبدیلی چاہتے تھے اور انھیں مودی کے طور پر مضبوط لیڈر نظر آیا تو انھیں ووٹ دے دیا اگرچہ اقلیتوں کا ایک حصہ مودی کو لے کر اب بھی ڈرا اور خدشات سے گھرا ہے،

 

 وہ اب بھی سوچ رہا ہے کہ پتہ نہیں مودی کے راج میں اس کے ساتھ کیا ہوگا۔ انھوں نے کہا کہ مودی نے سب کو ساتھ لے کر چلنے کی بات کہی ہے لیکن کہیں اقلیتوں کا ذکر نہیں کیا اگر بی جے پی لیڈر نے ایسا کیا ہوتا تو مسلمانوں کے ذہن میں ان کے لیے بسا خوف کم ہوتا اب مودی کے سامنے اس خوف کو ختم کرنیکا چیلنج ہے۔

جمعرات, 05 جون 2014 20:07

غنی خان

غنی خان ۱۹۴۴ میں هشتنگر میں پیدا هوا ،

 

انهیں ۲۰ ویں صدی کا عظیم شاعر مانا جاتا هے اور حوشحال خان خٹک اور رحمان بابا کا درجه دیا جاتا هے، آپ سرخ پوش لیڈر اور سرحدی گاندهی خان عبدالغفار خان کے بیٹے تهے. آپ کی بیوی روشن ایک پارسی خاندان سے تعلق رکهتی تهی جو که  نواب رستم جنگ کی بیٹی تهی،  ان کی تین اولاد ، دو بیٹیان شاندانه اور زرین، اور بیٹا فریدن تها

 

.
انہوں نے رابندر ناتھ ٹیگور کے شانتی نکیتن آرٹ اکیڈمی میں تعلیم حاصل کرنے کیلیے انگلینڈ کا دوره کیا،  اور پینٹنگ اور مورتی بنانے کا فن حاصل کیا.وہ واپس آئے ، اس کی بعد امریکه سے شوگر ٹکنالوجی میں تعلیم حاصل کی اور واپس آکر تخت بهائی شوگر ملز میں نوکری کی.  اپنے باپ کی سیاسی اثر رسوخ کی وجه سی سیاست میں حصه لینا شروع کیا اور پختنوں کی آزادی کے لیے جدوجهد کی. ۱۹۴۸ میں گرفتار هوئے ، اگرچه انهوں نے سیاست ترک کی تهی پهر بهی ۱۹۵۴ تک جیل میں رهے ،

 

اس دوران مختلف جیلوں میں رهے،  جیل کے ان تین سالوں میں اس نے اپنی زندگی کی سب سے بهتریں شعری مجموعه " د پنجرے چغار " لکها ،  عهد جوانی کی چند غزلوں اور نظموں کے علاوه ان کے تمام شاعری سیاست کی مخالف هے ،  ان کی اور دو شعری مجموعے پانوس اور پلوشے هیں ، ۱۹۵۸ میں انهوں نے ایک مختصر کتاب پٹهان شائع کی ، جوکه ان کی شاعرانه مزاج اور ان کی پینٹنگ اور مورتی بنانے کی طرح ، ان کے مزاج کی ترجمان ن تهی،  ۱۹۹۶ میں اس عظیم شاعر کا انتقال هوا.
ان کی شاعری میں وطن سے محبت، سیاست سے نفرت ، اور ایک گهرا فلسفی انداز نمایاں هے

 

.

اسلام آباد: فیڈل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) نے آئندہ مالی سال کے وفاقی بجٹ میں موبائل فون سیٹ کی درآمد پر 150 سے 500روپے سیلز ٹیکس کے علاوہ موبائل ٹیلی فون کی رجسٹریشن کے موقع پرانٹرنیشنل موبائل ایکویپمنٹ شناخت نمبر(آئی ایم ای آئی) پر بھی ڈھائی سو روپے سیلز ٹیکس عائد کردیا ہے۔

 

 

جبکہ سندھ، پنجاب اور خیبر پختونخوا میں ٹیلی کمیونی کیشن سروسز پر فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی ختم کرنے کے بجائے وصول نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ اسلام آباد کیپٹل ٹیریٹری اور بلوچستان میں ٹیلی کمیونی کشن سروسز پر عائد فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی کی شرح19.5فیصد سے کم کرکے 18.5فیصد کرنے کی تجویز دی ہے۔

 

ایف بی آرکے سینئر افسر نے بتایا کہ موبائل فون سیٹ کی درآمد اور آئی ایم ای نمبر پر سیلز ٹیکس کے نفاذ کو فنانس بل کے ذریعے قانونی تحفظ دینے کیلیے نویں شیڈول میں شامل کرنے کی تجویز دی گئی ہے، یہ بھی تجویز ہے کہ جو سیلولر موبائل فون آپریٹرز اپنے سسٹم میں آئی ایم ای آئی نمبر رجسٹر کریں گے وہ آئی ایم ای آئی رجسٹریشن پر 150سے 250 روپے سیلز ٹیکس وصول کریں گے تاہم کسی کوان پٹ ٹیکس ایڈجسٹمنٹ نہیں دی جائیگی۔

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے آئندہ مالی سال2014-15 کے بجٹ میں سبزی، دال، زندہ جانور، سی این جی بس، ایل پی جی بس اور پٹرولیم مصنوعات سمیت200سے زائد اشیا کی درآمد پر ایک فیصد کسٹمز ڈیوٹی عائد کی ہے۔

 

 

اس ضمن میں پاکستان کسٹمز ٹیرف میں ترامیم کردی گئی ہیں جس سے قدرتی گیس، سبزیوں اور پٹرولیم مصنوعات سمیت 200 سے زائد اشیا مہنگی ہوجائیں گی۔

 

ایک سینئر افسر نے ایکسپریس کو بتایا کہ جن 200سے زائد اشیا پر کسٹمز ڈیوٹی عائد کی گئی ہے ان میں گائے، بھینس، بکرے، بھیڑیں، دنبے اور دیگر زندہ جانور، بغیر ہڈی کا گوشت، بکرے کا گوشت، کھمبیاں، مچھلی کے انڈے، تازہ اور فرٹیلائزر پر مشتمل کیمیکلز، پوٹاشیم سلفیٹ، یوریا، پرنٹنگ گم، پگمنٹ تھکنر، ووڈ فلور،جیوٹ ویسٹ، اسٹین لیس اسٹیل، ٹینڈ آئرن اور اسٹیل اسکریپ، لیپ ٹاپ کمپیوٹرز، نوٹ بکس، ملٹی میڈیا کٹس، مائیکرو کمپیوٹر، پرسنل کمپیوٹر، کی بورڈز، ماؤس اور دیگر پوائنٹنگ ڈیوائسز، اسکینرز، فلاپی ڈسک ڈرائیوز، ہارڈ ڈسک ڈرائیوز، ٹیپ ڈرائیوز، سی ڈی روم ڈرائیو، ڈیجیٹل وڈیو ڈسک ڈرائیو، ریمووایبل اینڈ ایکسچینج ایبل ڈسک ڈرائیوز، کنٹرول یونٹ، کمپیوٹر کیسنگز، موڈیم، انرجی سیونگ لیمپ، انرجی سیونگ ٹیوب، سی این جی بسوں اور ایل پی جی بسوں، ڈریگرز اور نیٹ ورکنگ ایکوپمنٹ سمیت دیگر اشیا شامل ہیں۔

 

بجٹ میں سندھ، پنجاب اور خیبرپختونخوا میں ٹیلی کمیونیکیشن سروسز پر فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی ختم کرنے کے بجائے وصول نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ اسلام آباد کیپیٹل ٹیرٹری اور بلوچستان میں ٹیلی کمیونیکشن سروسز پر عائد فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی کی شرح ساڑھے19 فیصد سے کم کرکے ساڑھے 18فیصد کرنے کی تجویزدی ہے۔ فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے آئندہ مالی سال 2014-15 کے وفاقی بجٹ میں او جی ڈی سی ایل کو پاور جنریشن کمپنیوں کوگیس کی فروخت پر300روپے فی ایم ایم بی ٹی یو تک گیس انفرااسٹرکچر ڈیولپمنٹ سیس عائد کرنے کی تجویز دیدی ہے۔

واشنگٹن: امریکا نے مغوی فوجی کی رہائی کے بدلے چھوڑے گئے 5 افغان طالبان قیدیوں کی رہائی کے حوالے سے ہونے والی تنقید کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ رہا کئے گئے طالبان قیدی دہشت گرد نہیں بلکہ جنگی قیدی تھے

۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق وائٹ ہاوس کے ترجمان جے کارنے نے کہا کہ افغانستان میں طالبان اس جنگ کا ایک جنگی فریق ہے جس میں امریکا گزشتہ 10 برس سے شامل ہے۔ جے کارنے کا کہنا تھا کہ امریکا نے قطر کی حکومت کے ذریعے مذاکرات کو کامیاب بناتے ہوئے گوانتاناموبے میں قید 5 طالبان قیدیوں کی رہائی کو ممکن بنایا اور اِسی فیصلے کے نتیجے میں امریکی فوجی کو بحفاظت آزاد کروایا۔

دوسری جانب  امریکی صدر بارک اوبامہ نے بھی اپنے اِس اقدام کو درست قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا کبھی بھی اپنے فوجیوں کو تنہا نہیں چھوڑتا۔ انہیں امریکی فوجی کی رہائی کا موقع ملا جس کا انہوں نے فائدہ اٹھایا۔

واضح رہے کہ امریکی فوجی کی آزادی کے بدلے 5 طالبان قیدیوں کی رہائی کے فیصلے کی وجہ سے اوباما حکومت پر مسلسل تنقید ہورہی ہے۔ ریپبلیکن پارٹی مطالبہ کررہی ہے کہ اِس فیصلے کے خلاف امریکی صدر بارک اوبامہ سے جواب طلبی ہونی چاہیے کیونکہ اُنہوں نے کانگریس کو اعتماد میں لیے بغیر یہ فیصلہ کیا ہے جو قانون کی خلاف ورزی ہے جبکہ افغانستان نے بھی اِس فیصلے پر شدید تنقید کی ہے۔

پونے: مودی حکومت آتے ہی جہاں انتہا پسند ہندو  بھارت میں سینہ چوڑا کرکے چل رہے ہیں وہیں اپنی مسلمانوں سے ازلی دشمنی میں بھی اتنے آگے چلے گئے ہیں کہ مسلمان آئی ٹی پروفیشنل کو  صرف ایک تصویر کا بہانہ بنا کر مار مار کر شہید کردیا۔

رپورٹ کے مطابق ریاست مہاراشٹرا کے شہر ہدپسار کی بنکار کالونی کے 28 سالہ رہائشی شیخ محسن صادق نے ہندوؤں کے دیوتا ’’شیوا جی‘‘ اور ہندو انتہا پسند تنظیم شیو سینا کے آنجہانی سربراہ بال ٹھاکرے کی تصاویر سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک پر ڈالی جس پر احتجاج شروع ہوگیا اور انتہا پسند تنظیم ہندو راشٹرا سینا کے  کارندوں نے موقع پاکر شیخ محسن پر حملہ کرکے لاٹھیوں کے وار سے شدید زخمی کردیا، شیخ محسن کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ شیخ محسن پر حملہ کرنے والے تمام ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے اور ان سے تحقیقات جاری ہے

بیجنگ: چین نے شمال مشرقی صوبے سنکیانگ میں ہونے والے فسادات میں ملوث ہونے پر 81 افراد کو دہشت گردی کے الزام میں سزائے موت سمیت مخلتف سزائیں سزا دی ہیں۔

چین کے سرکاری میڈیا کے مطابق  عدالتوں نے شمالی مغربی صوبے سنکیانگ میں ہونے والے فسادات میں ملوث ہونے پر 81 افراد کو دہشت گردی کے الزام میں سزائیں سنا دی ہیں، ان میں سے 9 افراد کو سزائے موت بھی سنائی گئی ہے۔ ان افراد پر قتل اور جلاؤ گھیراؤ سمیت 23 مقدمات دائر تھے۔

واضح رہے کہ چین کے شمال مغربی صوبے سنکیانگ میں گزشتہ برس ہونے والے فسادات میں درجنوں افراد ہلاک جب کہ املاک کو بھی شدید نقصان پہنچا تھا۔

ابوجا: نائجیریا میں شدت پسند تنظیم بوکو حرام کے تازہ حملے میں سیکڑوں افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے جب کہ اس دوران کئی املاک کو بھی آگ لگادی گئی۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق مقامی رکن پارلیمنٹ نے بتایا کہ بوکو حرام نے گووزا قصبے کے کئی گاؤں پر حملہ کرکے متعدد گھروں، مساجد اور گرجا گھروں کو جلا دیا جس سے سیکڑوں افراد ہلاک ہوگئے جبکہ جان بچانے کی کوشش کے دوران علاقے سے نکلنے والے متعدد افراد کو بھی گولیاں مار کر ہلاک کردیا گیا، مقامی افراد کے مطابق شدت پسند تنظیم کے حملے میں تقریباً 500 افراد ہلاک ہوئے تاہم خراب مواصلاتی نظام اور آزاد ذرائع سے تصدیق نہ ہونے کے باعث ہلاکتوں کی حتمی تعداد سے متعلق کچھ نہیں کہا جاسکتا۔

واضح رہے کہ بوکو حرام تنظیم کی جانب سے یہ کوئی پہلا حملہ نہیں ہے، اس سے قبل بھی یہ تنظیم نائجیریا کے متعدد قصبوں اور علاقوں میں کئی حملے کرچکی ہے جس میں اب تک ہزاروں افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں جبکہ نائیجیرین حکومت ان کے سامنے پوری طرح بے بس نظر آتی ہے۔

برسلز: طاقتور مغربی ممالک کی تنظیم جی سیون نے دھمکی دی ہے کہ اگر روس یوکرین میں مداخلت سے باز نہ آیا تو اسے مزید سخت پابندیوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

 

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق روس کے جی 8 ممالک کی تنظیم سے بیدخلی کے بعد پہلی مرتبہ بیلجیم کے شہر برسلز میں جی سیون تنظیم کے رہنماؤں نے ملاقات کی، ملاقات میں امریکی صدر بارک اوباما، برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون، جرمن چانسلر انجیلا مرکل کے علاوہ دیگر رہنما شریک تھے۔ اس موقع پرمغربی رہنماؤں کا کہنا تھا کہ یوکرین میں روس کے اقدامات ناقابلِ قبول ہیں اور ان کا خاتمہ ہونا چاہیے اگر روسی مداخلت ختم نہ ہوئی تو اس پر مزید سخت پابندیاں عائد کردی جائیں گی۔

جی سیون ممالک نے اس بات پر اتفاق کیا ہے موجودہ حالات میں یوکرین کو تنہا نہیں چھوڑا جاسکتا اور جی سیون ممالک سیاسی اور اقتصادی طور پر یوکرین کے ساتھ کھڑی ہیں جبکہ رہنماؤں کا کہنا تھا کہ  روس پر اضافی پابندیوں پر جلد عملدرآمد شروع کردیا جائے گا۔

دوسری جانب روسی صدر ولادی میرپیوٹن نے فرانسیسی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ ماسکو حکومت نو منتخب یوکرینی صدر پوروشینکو کے ساتھ بات چیت کے لئے تیار ہے، روسی صدر نے  کہا کہ وہ امریکی صدر بارک اوباما کے ساتھ بھی یوکرین کے معاملے پر بات چیت کے لئے تیار ہیں تاہم واشنگٹن کی جانب سے یوکرین میں فوجی مداخلت کے الزامات کو مسترد کرتے ہیں۔

اسلام آباد: ملک کے میدانی علاقوں میں جون کے مہینے کی روایتی گرمی اپنا جوبن دکھا رہی ہے اور آئندہ چند روز تک گرمی کی شدت میں کمی کا بھی کوئی امکان نہیں۔  

محکمہ موسمایت کے مطابق ملک کے اکثر میدانی ا ور بالائی علاقوں میں شدید گرمی کی لہر جاری ہے اور یہ لہر جنوبی علاقوں کے بعد اب بالائی علاقوں کو بھی اپنی لپیٹ میں لے رہی ہے۔ ملک میں آج سب سے زیادہ درجہ حرارت لاڑکانہ میں ریکارڈ کیا گیا جہاں پارہ 50 ڈگری تک چڑھ گیا، اس کے علاوہ جیکب آباد میں 49، بھکر، نورپور تھل، تربت، روہڑی، سبی ، سکھر  اور موہن جو داڑو میں 48،رحیم یار خان ، حیدر آباد، پڈ عیدن، اوکاڑہ،۔بےنظیر آباد اور شور کوٹ میں 47 ڈگری ریکارڈ کیا گیا۔

جھنگ، ڈی جی خان، ڈی آئی خان، ساہیوال اور خان پور میں بھی شدید گرمی پڑی جہاں کا  درجہ حرارت46 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جب کہ گرمی کے معاملے میں  میر پور خاص، مٹھی، فیصل آباد، ملتان، منڈی بہاؤلدین اور لاہوربھی کسی سے پیچھے نہ رہے اوریہاں کا درجہ حرارت 45 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ آئندہ چند روز کے دوران ملک کے بیشتر حصوں میں موسم شدید گرم اور خشک رہنے کا امکان ہے تاہم ہفتے اور اتوار سے ملک کے بالائی علاقوں میں گرمی کی شدت میں کمی کا امکان ہے۔

چارسده فیس بک پر لائک کریں

چارسده فوٹو گیلری

Advertisement